• You have 1 new Private Message Attention Guest, if you are not a member of Urdu Tehzeb, you have 1 new private message waiting, to view it you must fill out this form.
    . .
    .

    User Tag List

    + Reply to Thread
    + Post New Thread
    Results 1 to 10 of 10

    Thread: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

    1. #1
      Family Member www.urdutehzeb.com/public_html smartguycool's Avatar
      Join Date
      Nov 2017
      Posts
      140
      Threads
      87
      Thanks
      50
      Thanked 199 Times in 106 Posts
      Mentioned
      20 Post(s)
      Tagged
      37 Thread(s)
      Rep Power
      1

      مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      انسان چاہے مرد ہو یا عورت یہ طے ہے کہ وہ احساسات، جذبات و محسوسات سے عاری نہیں ہو سکتا۔ قدرت نے انسانی ذہن کی بنت میں جہاں ہمت قوت ارادی اور مضبوط حواس استعمال کیے ہیں وہیں دوسری طرف نازک ترین جذبات، احساسات اور لطافت بھی فطرت انسانی کا ایک لازمی جزو ہیں ۔
      کچھ عرصہ سے مسلسل عورتوں کے حق اور مرد مخالف مضامین پڑھنے کے بعد سوچ کا ایک در وا ہوا کہ کیا یہ صرف صنف نازک ہی ہے جو مردوں کے ہاتھوں ذہنی و جسمانی تشدد کا شکار ہوتی ہے یا کہیں مرد حضرات بھی ایسے تشدد کا نشانہ بنتے ہیں؟
      ظاہر ہے معاشرہ میں کسی ایک پلڑے کا جھکاؤ کم یا زیادہ تو ہو سکتا ہے مگر یہ بات بعید از قیاس ہے کہ ایک پلڑا تو زمین سے لگا رہے اور دوسرا بالکل خالی ہو۔ مرد بھی خواتین کی طرح بنی نوع انسان ہی ہیں اور ذہنی تشدد واذیت سے بالکل انہی کی طرح متاثر ہوتے ہیں بلکہ کچھ صورتوں میں مرد زیادہ سنگین نوعیت کے مسائل کا شکار ہوتے ہیں ۔
      ذہنی تشدد ایک اصطلاح ہے جس کا مطلب کسی ایک فرد یا افراد سے ایسا رویہ یا سلوک روا رکھنا ہے جو فرد یا افراد کی عزت نفس، اس کے فیصلہ کرنے کی صلاحیتوں اور معاشرے میں اس کے مقام پر منفی اثرات مرتب کرے۔ اور ایک فرد کو اپنی ودیعت کردہ صلاحیتوں کی نگہداشت و پرداخت اور ان کی ترقی و استعمالات کی راہ میں رکاوٹ ڈالنے پر محمول ہو۔
      ماہرین نفسیات کے مطابق ذہنی تشدد، تشدد کی وہ قسم ہے جس میں ایک فرد نفسیاتی طور پر دوسرے فرد کے ہاتھوں کچلا جاتا ہے اور اس کا نتیجہ نفسیاتی مسائل، ذہنی دباؤ اور شدید ہیجان کی صورت میں ظاہر ہوتا ہے۔ ایک اندازےکے مطابق مرد نفسیاتی طور پر ذہنی تشدد سے عورتوں کی نسبت زیادہ متاثر ہونے کا رحجان رکھتے ہیں ۔
      ذیل میں مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد کی اقسام بیان کی گئی ہیں مگر ان پر بات کرنے سے پہلے آئیے ایک فرضی کہانی پر نظر ڈالتے ہیں ۔
      زید ایک درمیانے طبقے کا شادی شدہ فرد ہے جو ایک دفتر میں سرکاری ملازم ہے۔ زید کے گھریلو حالات کچھ اس طرح ہیں کہ گھر کے معاملات کی کرتا دھرتا اس کی بیوی ہے اور اس کی ماں کو یہ بات پسند نہیں کہ زید کی بیوی معاملات پر حاوی رہے یعنی دوسرے معنوں میں زید کی ماں گھر اور اس سے متعلقہ فیصلوں کو اپنے اختیار میں رکھنا چاہتی ہے۔
      زید جب ایک مصروف اور تھکا دینے والا دن گزار کر گھر آتا ہے تو بجائے ذہنی طور پر پرسکون ہونے کے، وہ کھنچاؤ بھرے گھریلو ماحول سے مزید ذہنی تھکاوٹ اور دباؤ کا شکار ہو جاتا ہے۔
      ماں اسے بیوی کا غلام ہونے کا طعنہ دیتی ہے اور بیوی اسے ایک ناکام اور ناکارہ شوہر کے القابات سے نوازتی ہے جو اپنی بیوی کے حق میں آواز بلند کرنے کی جرات نہیں کر سکتا۔ زید کو یہ صورتحال رفتہ رفتہ اس نہج پر پہنچا دیتی ہے کہ وہ خود کو ایک ناقابل اور ناکام ترین انسان تصور کرنے لگتا ہے جو گھر میں ایک فالتو شے کی سی بھی اہمیت نہیں رکھتا ۔ خود ترسی اور اپنی بے وقعتی پر کڑھنے کی وجہ سے اس کی دلچسپی بالآخر گھر بیوی بچوں دیگر متعلقین اور اپنی ملازمت سے ختم ہو جاتی ہے اور مسلسل دباؤ کا نتیجہ ایک دن اس کی چانک موت کی صورت میں نکلتا ہے۔
      اب اگر اس فرضی کہانی کے حقیقی پہلوؤں پر غور کیا جائے تو اس سے مندرجہ ذیل نتائج اخذ کیے جا سکتے ہیں ۔
      زید کمزور قوت ارادی کا مالک تھا۔
      زید کو اپنی شریک حیات کا جذباتی تعاون حاصل نہیں تھا
      زید کی ماں کو اپنے بیٹے سے زیادہ حاکمیت برقرار رکھنے میں دلچسپی تھی
      زید جذباتی تشدد کا شکار تھا۔
      مردوں پر کیے جانے والے ذہنی تشدد کی بہت سی اقسام اور صورتیں ہیں جن کا مختصر جائزہ پیش کیا جاتا ہے۔
      بے موقع و بے بات بے عزت کرنا ، مرد کو اس بات کا احساس دلانا کہ وہ ناکام مرد ہے ۔ دوسرے مردوں کو بطور مثال پیش کر کے تقابلی جائزے لینا۔ ناشائستہ زبان اور نامناسب الفاظ استعمال کرنا۔
      گھریلو اور ازدواجی سکون سے محروم کرنا، حقیر سمجھنا، فیصلوں پر اثر انداز ہونا، کلی اختیارات کا طالب ہونا، آپسی معاملات میں مرد کو اعتمادمیں نہ لینا۔
      مرد کو ذہنی آزار دینے کے لیے خود پر یا بچوں پر تشدد کرنا، خودکشی کی دھمکیاں یا کوشش کرنا، بعض صورتوں میں مرد پر جسمانی تشدد کرنا۔
      علیحدگی کی صورت میں بچوں کی تحویل سے متعلقہ معاملات میں عدم تعاون کرنا۔ بعض صورتوں میں خواتین بچوں کو ان کے باپ سے ملنے بھی نہیں دیتیں ۔
      مرد کو ناقابل اعتماد قرار دینا اور اس کی ناحق کردار کشی کرتے ہوئے خفیہ تعلقات کا الزام لگانا ۔
      گھریلو ذمہ داریاں احسن طور پر انجام نہ دینا اور مالی نقصان پہنچانا
      مرد کے متعلقین مثلا ماں باپ بہن بھائیوں کے بارے میں نازیبا کلمات کا استعمال کرنا اور ذلیل و حقیر سمجھنا ۔

      یہ بات درست ہے کہ معاشرے میں خواتین پر ذہنی تشدد کا تناسب زیادہ ہے مگر مرد حضرات بھی اس کا شکار ہوتے ہیں اور یہ بھی حقیقت ہے کہ مردانہ انا کی وجہ سے وہ اس سے متاثر بھی زیادہ ہوتے ہیں ۔
      ذہنی تشدد ایک بدترین فعل ہے جو ایک فرد کی ذہنی و جسمانی بربادی کا ذمہ دار ہوتا ہے اور ایک فرد ایک معاشرے کا اہم جزو ہوتا ہے ۔لامحالہ یہ بربادی معاشرے کی بربادی کا باعث بھی بنتی ہے ۔ ذہنی تشدد چاہے عورت پر کیا جائے یا مرد پر دونوں صورتوں میں یہ قبیح ظلم اور قابل مذمت ہے۔

      آئیے ایک دوسرے کو عزت اور احترام دینے کا اغاز کریں تا کہ ایک صحتمند اور متوازن معاشرے کی بنیاد رکھی جا سکے جہاں باہمی عزت اور مشترکہ اقدار کو اچھی طرح پھلنے پھولنے کا موقع مل سکے اور افراد معاشرے کے کارآمد پرزے کے طور پر سامنے آئیں


      بشکریہ .. مریم مجید ڈار



    2. The Following 3 Users Say Thank You to smartguycool For This Useful Post:

      intelligent086 (01-12-2018),Moona (01-13-2018),Ubaid (01-11-2018)

    3. #2
      Administrator www.urdutehzeb.com/public_html intelligent086's Avatar
      Join Date
      May 2014
      Location
      لاہور،پاکستان
      Posts
      38,096
      Threads
      12040
      Thanks
      8,030
      Thanked 6,779 Times in 6,351 Posts
      Mentioned
      4202 Post(s)
      Tagged
      3287 Thread(s)
      Rep Power
      10

      Re: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      عمدہ انتخاب
      شیئر کرنے کا شکریہ



      کہتے ہیں فرشتے کہ دل آویز ہے مومن
      حوروں کو شکایت ہے کم آمیز ہے مومن

    4. The Following User Says Thank You to intelligent086 For This Useful Post:

      Moona (01-13-2018)

    5. #3
      Vip www.urdutehzeb.com/public_html Moona's Avatar
      Join Date
      Feb 2016
      Location
      Lahore , Pakistan
      Posts
      6,026
      Threads
      0
      Thanks
      6,891
      Thanked 4,018 Times in 3,929 Posts
      Mentioned
      548 Post(s)
      Tagged
      151 Thread(s)
      Rep Power
      8

      Re: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      Umdah Intekhab
      Nyc Sharing
      t4s


      Politician are the same all over. They promise to bild a bridge even where there is no river.
      Nikita Khurshchev

    6. The Following User Says Thank You to Moona For This Useful Post:

      smartguycool (01-13-2018)

    7. #4
      Family Member www.urdutehzeb.com/public_html smartguycool's Avatar
      Join Date
      Nov 2017
      Posts
      140
      Threads
      87
      Thanks
      50
      Thanked 199 Times in 106 Posts
      Mentioned
      20 Post(s)
      Tagged
      37 Thread(s)
      Rep Power
      1

      Re: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      Quote Originally Posted by Moona View Post
      Umdah Intekhab Nyc Sharing t4s
      comment karne main kanjoos hain ap


    8. #5
      Vip www.urdutehzeb.com/public_html Moona's Avatar
      Join Date
      Feb 2016
      Location
      Lahore , Pakistan
      Posts
      6,026
      Threads
      0
      Thanks
      6,891
      Thanked 4,018 Times in 3,929 Posts
      Mentioned
      548 Post(s)
      Tagged
      151 Thread(s)
      Rep Power
      8

      Re: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      Quote Originally Posted by smartguycool View Post
      comment karne main kanjoos hain ap

      Ilzam aurat par hai is liye kanjusi ki hai aor kuch thread aise hote hain jin ka mere liye jawab daina na'mumkan hai


      Politician are the same all over. They promise to bild a bridge even where there is no river.
      Nikita Khurshchev

    9. The Following User Says Thank You to Moona For This Useful Post:

      smartguycool (01-14-2018)

    10. #6
      Star Member www.urdutehzeb.com/public_html Ubaid's Avatar
      Join Date
      Nov 2017
      Location
      Dubai U.A.E
      Posts
      844
      Threads
      182
      Thanks
      434
      Thanked 375 Times in 294 Posts
      Mentioned
      290 Post(s)
      Tagged
      42 Thread(s)
      Rep Power
      1

      Re: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      Quote Originally Posted by Moona View Post

      Ilzam aurat par hai is liye kanjusi ki hai aor kuch thread aise hote hain jin ka mere liye jawab daina na'mumkan hai
      Bat Hamesha insaf ki taraf karna chahye chahai us mai ilzam aurat par ho ya mard par donon same hai.


    11. The Following User Says Thank You to Ubaid For This Useful Post:

      Moona (01-14-2018)

    12. #7
      Family Member www.urdutehzeb.com/public_html smartguycool's Avatar
      Join Date
      Nov 2017
      Posts
      140
      Threads
      87
      Thanks
      50
      Thanked 199 Times in 106 Posts
      Mentioned
      20 Post(s)
      Tagged
      37 Thread(s)
      Rep Power
      1

      Re: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      Quote Originally Posted by Moona View Post

      Ilzam aurat par hai is liye kanjusi ki hai aor kuch thread aise hote hain jin ka mere liye jawab daina na'mumkan hai
      Bat ilzam ki nahi hai janab.... bat sirf comments ki thi... aur wo aap ne samjha dia ke haqeqatan mumkin nahi ho pata kuch thread par comments karna....


    13. The Following User Says Thank You to smartguycool For This Useful Post:

      Moona (01-14-2018)

    14. #8
      Vip www.urdutehzeb.com/public_html Moona's Avatar
      Join Date
      Feb 2016
      Location
      Lahore , Pakistan
      Posts
      6,026
      Threads
      0
      Thanks
      6,891
      Thanked 4,018 Times in 3,929 Posts
      Mentioned
      548 Post(s)
      Tagged
      151 Thread(s)
      Rep Power
      8

      Re: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      Quote Originally Posted by Ubaid View Post
      Bat Hamesha insaf ki taraf karna chahye chahai us mai ilzam aurat par ho ya mard par donon same hai.
      Comments ko to insaf se pesh karte hain


      Politician are the same all over. They promise to bild a bridge even where there is no river.
      Nikita Khurshchev

    15. The Following User Says Thank You to Moona For This Useful Post:

      Ubaid (01-15-2018)

    16. #9
      Star Member www.urdutehzeb.com/public_html Ubaid's Avatar
      Join Date
      Nov 2017
      Location
      Dubai U.A.E
      Posts
      844
      Threads
      182
      Thanks
      434
      Thanked 375 Times in 294 Posts
      Mentioned
      290 Post(s)
      Tagged
      42 Thread(s)
      Rep Power
      1

      Re: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      Quote Originally Posted by Moona View Post
      Comments ko to insaf se pesh karte hain
      Ap to qareban har post par sirf ek hi comment karti hai jo ap ko malom hai


    17. The Following User Says Thank You to Ubaid For This Useful Post:

      Moona (01-15-2018)

    18. #10
      Vip www.urdutehzeb.com/public_html Moona's Avatar
      Join Date
      Feb 2016
      Location
      Lahore , Pakistan
      Posts
      6,026
      Threads
      0
      Thanks
      6,891
      Thanked 4,018 Times in 3,929 Posts
      Mentioned
      548 Post(s)
      Tagged
      151 Thread(s)
      Rep Power
      8

      Re: مردوں پر روا رکھے جانے والے ذہنی تشدد

      Quote Originally Posted by Ubaid View Post
      Ap to qareban har post par sirf ek hi comment karti hai jo ap ko malom hai

      Har post padhi to jati hai, Aap ye to nahi keh sakte aap ki post ko dekha nahi, copy & Paste par jawab to milta hai


      Politician are the same all over. They promise to bild a bridge even where there is no river.
      Nikita Khurshchev

    + Reply to Thread
    + Post New Thread

    Thread Information

    Users Browsing this Thread

    There are currently 1 users browsing this thread. (0 members and 1 guests)

    Visitors found this page by searching for:

    Nobody landed on this page from a search engine, yet!
    SEO Blog

    Posting Permissions

    • You may not post new threads
    • You may post replies
    • You may not post attachments
    • You may not edit your posts
    •